اشاعتیں

توہین رسالت کی سنگینی اور گستاخوں کا انجام

اسلام ہر صورت غالب ہوگا يُرِيدُونَ لِيُطْفِئُوا نُورَ اللَّهِ بِأَفْوَاهِهِمْ وَاللَّهُ مُتِمُّ نُورِهِ وَلَوْ كَرِهَ الْكَافِرُونَ ۔ هُوَ الَّذِي أَرْسَلَ رَسُولَهُ بِالْهُدَىٰ وَدِينِ الْحَقِّ لِيُظْهِرَهُ عَلَى الدِّينِ كُلِّهِ وَلَوْ كَرِهَ الْمُشْرِكُونَ) (الصف : 8.9) یہ(کافر اور مشرک) لوگ چاہتے ہیں کہ اللہ کے نور کو اپنی پھونکوں سے بجھادیں اور اللہ اپنے نور کو پورا کرکے ہی رہیگا خواہ کافروں کو ناگوار ہو۔ وہی اللہ تو ہے جس نے اپنے رسول کو ہدایت اور سچا دین دے کر بھیجا تاکہ اسے سب دینوں پر غالب کردے اگرچہ مشرکوں کو کتنا ہی ناگوار کیوں نہ ہو۔ عَنْ تَمِيمٍ الدَّارِيِّ قَالَ : سَمِعْتُ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ يَقُولُ : لَيَبْلُغَنَّ هَذَا الْأَمْرُ مَا بَلَغَ اللَّيْلُ وَالنَّهَارُ، وَلَا يَتْرُكُ اللَّهُ بَيْتَ مَدَرٍ وَلَا وَبَرٍ إِلَّا أَدْخَلَهُ اللَّهُ هَذَا الدِّينَ بِعِزِّ عَزِيزٍ، أَوْ بِذُلِّ ذَلِيلٍ، عِزًّا يُعِزُّ اللَّهُ بِهِ الْإِسْلَامَ، وَذُلًّا يُذِلُّ اللَّهُ بِهِ الْكُفْرَ .(مسند احمد : 16957) سیدنا تمیم داری رضی اللہ عنہ سے روایت ہے …

جہیز سے متعلق کتب:

.


جہیز سے متعلق کتب:

~~~~~~~~~~~

۱.
جہیز کی تباہ کاریاں

حافظ مبشر حسین لاہوری

https://archive.org/download/MohaddisBooks-01-Sep-to-30-Sep/Jahez-Ki-Tabaah-Kaariyaan.PDF

~~~~~~~~~~~

۲.
جہیز جوڑے کی رسم

کے۔رفیق احمد

http://www.archive.org/download/Jahaiz-Jore-Ki-Rasam/Jahaiz-Jore-Ki-Rasam.pdf

~~~~~~~~~~~

۳.
جہیز جہنم کے انگارے

محمود خالد مسلم

https://archive.org/download/JahaizJahanumKAnghare/Jahaiz-Jahanum-K-Anghare.PDF

~~~~~~~~~~~

۴.
بارات اور جہیز کا تصور مفاسد اور حل

حافظ صلاح الدین یوسف

https://archive.org/download/BaratAurJahaizKaTasawarMafasadAurHall/Barat-Aur-Jahaiz-Ka-Tasawar-Mafasad-Aur-Hall.pdf

~~~~~~~~~~~


شئیر
.
تصویر
اسلام علیکم۔     دوستو،    اگر اپ کو ایڈیو قرآن چاہے۔  تو اس لنک پر کلک کرکے۔   پورا۔ download کر سکتے ہو۔    MP3. خوب صورت آواز میں۔       

https://drive.google.com/open?id=0B-tP95NlP0ehX3BITmZLeFBqeHc     


https://drive.google.com/open?id=0B-tP95NlP0ehX3BITmZLeFBqeHc

اتحاد کے متعلق کتب

.

*اتحاد و اتفاق سے متعلق کتب: *

~~~~

۱.
مسلمانوں کےدرمیان اتحاد و وحدت اور تہذیبی چیلنجز کے مقابلہ میں اس کا اثر

ڈاکٹر عبداللہ بن ابراہیم بن علی الطریقی

https://archive.org/download/mohaddis-books-1-6-2017-to-30-6-2017/Muslmano-Key-Darmiyaan-Ittehad-o-Wahdat.pdf

~~~~

۲.
اتحاد امت نظم جماعت

میاں محمد جمیل ایم۔اے

http://www.archive.org/download/Itthad-Ummat-Nazam-Jamat/Itthad-Ummat-Nazam-Jamat.pdf

~~~~

۳.
اصحاب ثلاثہ کے مقام پر شیعہ سنی اتحاد

عبد الرحمن عزیز الہ آبادی

https://archive.org/download/AsHaabESalaasaKeyMuqamParShiaSunniIttehad/As-Haab-e-Salaasa-Key-Muqam-Par-Shia-Sunni-Ittehad.PDF

~~~~

۴.
اتحاد ملت کا نقیب فکر اہل حدیث ہی کیوں ؟

سعید احمد چنیوٹی

https://archive.org/download/ItihadeMillatKaNaqeebFikreAhleHadithHiKiyon/Itihade-Millat-Ka-Naqeeb-Fikre-Ahle-Hadith-Hi-Kiyon.pdf

~~~~

۵.
*اسلام میں اختلاف کے اصول وآداب*

ڈاکٹر طہٰ جابر فیاض العلوانی

http://www.archive.org/download/Islam-Men-Ikhtalaf-k-Usool-o-Aadab/Islam-Men-Ikhtalaf-k-Usool-o-Aadab.pdf

~~~~

۶.
*تیسرا زاویہ اختلاف س…

وہ احادیث جن کا حکم رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم دیا۔

الحمد للہ: سنت نبوی شرعی مصادر میں سے بنیادی ماخذ ہے اور قرآن کریم نے نبی صلی اللہ علیہ و سلم سے منقول ہر چیز پر عمل کرنے کا حکم دیا ہے، فرمانِ باری تعالی ہے: 
(وَمَا آتَاكُمُ الرَّسُولُ فَخُذُوهُ وَمَا نَهَاكُمْ عَنْهُ فَانْتَهُوا وَاتَّقُوا اللَّهَ إِنَّ اللَّهَ شَدِيدُ الْعِقَابِ ) 
ترجمہ: اور رسول تمہیں جو کچھ بھی دے اسے تھام لو اور جس سے روکے اس سے رک جاؤ، اور اللہ سے ڈرو، بیشک اللہ شدید سزا دینے والا ہے۔[الحشر :7] اس لیے احادیث یاد کرنے کی ترغیب کے سلسلے میں ہمیں یہ کہا گیا ہے کہ جس قدر ہم سے احادیث یاد ہوں کرنی چاہییں یہ نہیں کہ کچھ یاد کر لیں اور کچھ نہ کیں۔ مزید زید بن ثابت رضی اللہ عنہ کہتے ہیں کہ  میں نے رسول اللہ صلی اللہ علیہ و سلم سے سنا آپ فرما رہے تھے: (اللہ تعالی اس شخص کو ہمیشہ تر و تازہ رکھے جو ہم سے کوئی ایک حدیث سنے اور اسے  یاد رکھے  یہاں تک  کہ وہ دوسروں کے پہنچا دے؛ بہت سے فقہ کے حاملین [ایسے لوگوں کو بات پہنچا دیتے ہیں جو ] ان سے بھی زیادہ سمجھ دار ہوتے ہیں، اور کتنے ہی فقہ کے حاملین سمجھدار نہیں ہوتے) ترمذی: (2656) امام ترمذی نے اس روایت کو نقل کرنے کے بعد لکھ…

Dawa360

تصویر

میلاد کی شرعی حیثیت

الحمد للہ: اول:  سب سے پہلى بات تو يہ ہے كہ علماء كرام كا نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم كى تاريخ پيدائش ميں اختلاف پايا جاتا ہے اس ميں كئى ايك اقوال ہيں جہيں ہم ذيل ميں پيش كرتے ہيں:  چنانچہ ابن عبد البر رحمہ اللہ كى رائے ہے كہ نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم كى پيدائش سوموار كے دن دو ربيع الاول كو پيدا ہوئے تھے.  اور ابن حزم رحمہ اللہ نے آٹھ ربيع الاول كو راجح قرار ديا ہے.  اور ايك قول ہے كہ: دس ربيع الاول كو پيدا ہوئے، جيسا كہ ابو جعفر الباقر كا قول ہے.  اور ايك قول ہے كہ: نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم كى پيدائش بارہ ربيع الاول كو ہوئى، جيسا كہ ابن اسحاق كا قول ہے. اور ايك قول ہے كہ: نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم كى پيدائش رمضان المبارك ميں ہوئى، جيسا كہ ابن عبد البر نے زبير بكّار سے نقل كيا ہے.  ديكھيں: السيرۃ النبويۃ ابن كثير ( 199 - 200 ).  ہمارے علم كے ليے علماء كا يہى اختلاف ہى كافى ہے كہ نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم سے محبت كرنے والے اس امت كے سلف علماء كرام تو نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم كى پيدائش كے دن كا قطعى فيصلہ نہ كر سكے، چہ جائيكہ وہ جشن ميلاد النبى صلى اللہ عليہ وسلم مناتے، اور…